راستے میں ایک موٹر سائیکل سوار شدید گرمی کی لہر کے دوران ہیٹ اسٹروک سے بچانے کے لیے اپنے چہرے کو کپڑے سے ڈھانپ رہا ہے۔ تصویر—اے پی پی/ فرحان خان
  • چیف میٹرولوجسٹ سردار سرفراز کا کہنا ہے کہ سندھ کے مختلف علاقوں میں پارہ 50 ڈگری سینٹی گریڈ تک جا سکتا ہے۔
  • خانپور، رحیم یار خان اور ڈیرہ اسماعیل خان میں درجہ حرارت 45 ڈگری سینٹی گریڈ سے تجاوز کر سکتا ہے۔
  • اس وقت ہیٹ ویو نے ملک کے مختلف علاقوں کو اپنی لپیٹ میں لے رکھا ہے، سردار سرفراز

کراچی: 13 سے 14 مئی کے درمیان درجہ حرارت 40 ڈگری سینٹی گریڈ تک بڑھنے کا امکان ہے جو جاری گرمی کے اسپیل کو مزید تیز کرے گا، پاکستان کے محکمہ موسمیات (پی ایم ڈی) نے منگل کو خبردار کیا ہے۔

چیف میٹرولوجسٹ سردار سرفراز نے کہا کہ اس وقت کراچی ہیٹ ویو کی زد میں نہیں ہے تاہم ہوا میں نمی زیادہ ہونے کی وجہ سے درجہ حرارت میں زیادہ شدت محسوس کی جا رہی ہے۔

ملک کے مختلف حصوں میں درجہ حرارت میں اضافے کی پیشگوئی کرتے ہوئے سردار سرفراز نے کہا کہ سندھ کے مختلف علاقوں میں پارہ 50 ڈگری سینٹی گریڈ تک جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بالائی، وسطی اور جنوبی پنجاب کے ساتھ ساتھ بلوچستان کے مختلف علاقوں میں گرمی کی شدت معمول سے زیادہ ریکارڈ کی گئی۔

انہوں نے مزید کہا کہ ملک کے مختلف حصوں میں ہیٹ ویو نے اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے اور یہ 15 مئی تک جاری رہ سکتی ہے۔ اس دوران گرمی کی شدت معمول سے زیادہ رہے گی۔

محکمہ موسمیات کے ایک اور اہلکار نے بتایا کہ پنجاب میں، پارہ دن کے وقت اوسط درجہ حرارت سے 7-9 ° C زیادہ ہو سکتا ہے، جب کہ سندھ کے بالائی اور وسطی علاقوں میں یہ معمول سے 6-8 ° C زیادہ ہو گا۔

خانپور، رحیم یار خان اور ڈیرہ اسماعیل خان میں درجہ حرارت 45 ڈگری سینٹی گریڈ سے بڑھ سکتا ہے۔ تاہم، جیکب آباد، دادو، لاڑکانہ اور سکھر میں درجہ حرارت 46-48 ڈگری سینٹی گریڈ کے درمیان رہنے کا امکان ہے۔

Written by Muhammad Bilal

Subscribe For Daily Latest Jobs