وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی، ترقی اور خصوصی اقدامات احسن اقبال نئے نصاب پر تبادلہ خیال کے لیے اجلاس کی صدارت کر رہے ہیں۔ — ٹویٹر / @betterpakistan
  • احسن اقبال نے تعلیمی شعبے سے متعلق اہم اعلان کر دیا۔
  • کہتے ہیں کہ حکومت نے اسلام آباد میں جدید ترین ٹیچرز ٹریننگ سینٹر قائم کرنے کا منصوبہ بنایا ہے۔
  • اساتذہ اور نصاب کے ماہرین کو سنٹر میں شامل ہونے کو کہتا ہے۔

اسلام آباد: وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی، ترقی اور خصوصی اقدامات احسن اقبال نے جمعرات کو ملک کے تعلیمی شعبے کے حوالے سے ایک اہم اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت نے نئے نصاب کا جائزہ لینے کے لیے ’’قومی نصاب سربراہی اجلاس‘‘ منعقد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ٹویٹر پر جاتے ہوئے، وزیر نے لکھا: “یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ ملک کے اعلیٰ نصاب ماہرین کے ساتھ ایک قومی نصابی سمٹ منعقد کی جائے۔ [a] نئے نصاب کا حتمی جائزہ۔”

اقبال نے مزید کہا کہ حکومت نے اسلام آباد میں ایک جدید ترین ٹیچرز ٹریننگ سینٹر قائم کرنے کا بھی منصوبہ بنایا ہے۔

“میں اعلیٰ نصاب پر زور دیتا ہوں۔ [and] استاد [training] ماہرین شامل ہونے کے لئے، “انہوں نے لکھا۔

پنجاب کا سنگل قومی نصاب ختم کرنے کا امکان

دوسری جانب پنجاب حکومت نے پنجاب کریکولم اینڈ ٹیکسٹ بک بورڈ (پی سی ٹی بی) کو ہدایت کی ہے کہ وہ سنگل نیشنل کریکولم (ایس این سی) کے تحت گریڈ 6 سے 8 تک کی کتابیں شائع نہ کریں۔ ڈان ڈاٹ کام اطلاع دی

ایس این سی کا پہلا مرحلہ پی ٹی آئی کی زیرقیادت حکومت نے پرائمری کلاسز کے لیے متعارف کرایا تھا لیکن اس وقت کی اپوزیشن نے اس پر تنقید کی تھی۔

Written by Muhammad Bilal

Subscribe For Daily Latest Jobs